متعدد شعبوں کےلیے ٹیکس چھوٹ ختم کیے جانے کا امکان


 قبائلی علاقہ جات میں کاروبارپر انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنے کی تجویز زیر غور ہے۔(فوٹو:فائل)

 قبائلی علاقہ جات میں کاروبارپر انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنے کی تجویز زیر غور ہے۔(فوٹو:فائل)

 اسلام آباد: وفاقی حکومت کی جانب سے آئندہ مالی سال 2021-22 کے وفاقی بجٹ میں متعدد شعبوں کےلیے ٹیکس چھوٹ ختم کیے جانے کا امکان ہے۔

ذرائع کے مطابق آئندہ قومی بجٹ میں متعدد شعبوں کے لیے ٹیکس چھوٹ ختم کیے جانے کا امکان ہے،  ایف بی آر ذرائع کے مطابق بجٹ میں 20 ارب روپے سے زائد کی انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنے کی تجویز زیر غور ہے۔

آئندہ بجٹ میں تنخواہ دار طبقے کو میڈیکل الاؤنس پرانکم ٹیکس چھوٹ ختم ہو سکتی ہے، اس کے علاوہ کارپوریٹ زرعی آمدن کے منافع پر ٹیکس چھوٹ ختم کرنے اور قبائلی علاقہ جات میں کاروبارپر انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنے کی تجویز زیر غور ہے، قبائلی علاقوں کے کاروبار کو 4 ارب روپے کی ٹیکس چھوٹ دی گئی تھی،

ذرائع کے مطابق سوشل سیکیورٹی اداروں کے لیے انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنے اورایل این جی ٹرمینلزاورآپریٹرز کو دی گئی انکم ٹیکس چھوٹ ختم کرنےکی سفارشات بھی کی گئیں ہیں۔





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *